Heera Stone Benefits, Color, Types in Urdu | Almas Stone

Heera-Stone-Benefits,-Color,-Types-in-Urdu--Almas-Stone-proudtips

Heera Stone “Almas stone” Benefits, Color, Types in Urdu & English۔ Diamond is the most precious of all stones, very shiny and crystalline. It shines like a rainbow in the light. It adorns the crowns of kings, emperors and emperors, and adorns the ornaments of the world’s most beautiful women, queens and princesses. It was kept in the royal treasury so Also called royal stone.

Heera Stone in Urdu

Heera-Stone-Benefits,-Color,-Types-in-Urdu-Almas-Stone-proud-tips

ہیرا پتھر ( الماس )

الماس پتھر سب پتھروں سے زیادہ قیمتی ، بہت چمکدار اور بلوری رنگ کا ہوتا ہے۔ روشنی میں قوس و قزح کی سی شعاعیں دیتا ہے۔یہ راجوں ، مہاراجوں اور شہنشاہوں کے تاجوں کی زینت بنتا رہا ہے، اور دنیائی خوبصورت عورتوں ، مہارانیوںاور شہزادیوں کے زیورات کو سجاتا رہا ہے۔اسے شاہی خزانوں میں محفوظ رکھا جاتا تھا اس لیے اسے شاہی پتھر بھی کہا جاتا ہے۔
اس دریافت 8ہزار سال قبل مسیح بتائی گئی ہے، لیکن اسے کس قوم نے اور کس ملک میں دریافت کیا تھااس کے بارے میں کوئی معلومات نہیں ملتی۔
ہیرے کو تیز سے تیز دھات بھی نہیں کاٹ سکتی، اسے سرف اسی (ہیرے) سے کاٹا جا سکتا ہے۔
موجودہ ترقی یافتہ دور میں جدید ٹیکنالوجی کی تیار کردہ مشینوں کے ذریعے ہیرے کو کاتا جاتا ہے، لیکن اس میں بھی ہیرے ہی کی قلمیں استعمال کی جاتی ہیں۔یورپ ، انگلستان اور فرانس میں ہیرے کاٹنے کے لیے باقاعدہ کارخانے لگائے گئے ہیں۔اسے پالش کرنے کے لیے کسی کیمیکل کی ضرورت نہیں ہوتی بلکہ یہ پہلے ہی بہت چمکدار ہوتا ہے۔تراشنے کے بعد اسی کے زرات سے اس کی پالش کی جاتی ہے۔یہ پتھر کانوں سے بھی نکالا جاتا ہے اور دریائوںکی ریت میں کنکروں اور پتھروں کے ساتھ پایا جاتا ہے۔چونکہ ہیرا پتھر بہت قیمتی ہوتا ہے اس لیے یہ پتھر پہننا عام آدمی کے بس کی بات نہیں، یہ صرف امراء ، وزراء اور بادشاہوں کا پہناوا ہے۔

کیمیائی اجزاء

ہیرے میں صرف ایک ہی کیمیائی عنصر ہوتا ہےاور وہ سو فیصد کاربن ہے۔ چونکہ کوئلے میں بھی کاربن ہوتا ہے اس لیے کوئلے کو بلیک ڈائمنڈ بھی کہا جاتا ہے۔

نام

( ٭ اردو میں ( الماس
( ٭ پنجابی میں ( ہیرا
( ٭ سنسکرت میں ( ہیرک
( ٭ انگریزی میں ( ڈائمنڈ

ہیرا (الماس) پتھر کی اقسام

چونکہ یہ پتھر بہت قیمتی ہے اس لیے دنیا بھر میں جوہریوں اور ما ہرین فلکیات نے دھوکا وغیرہ سے بچنے کے لیےاپنے اپنے خیالات اور افکار کے مطابق درجہ بندیاں کی ہیں۔

ہندوٗں کی اپنی ذاتوں کی درجہ بندیوں کے حساب سے اس پتھر کی 4اقسام ہیں۔
٭برہمنی ہیرک : سب سے اعلیٰ اور چمکدار ہیرا
٭ کشتری ہیرک : شفاف اور شہد کی رنگت کا ہیرا
٭ ویش ہیرک : سبزی مائل شفاف ہیرا
٭ شودر ہیرک : بھورےرنگ کا شفاف ہیرا

ایران میں ہیرے کو 5اقسام میں تقسیم کیا گیا ہے
٭ سیمابی : پارے کی رنگت والا ہیرا
٭ ابرکی : ابرک کی چمک کا ہیرا
٭ بلوری : شفاف اور چمکدار ہیرا
٭ حبشی : سیاہی مائل ہیرا
٭ زاغی : یہ بھی سیاہی مائل ہے

یورپ کے ماہرین نے اس کی3 قسمیں بیان کی ہیں۔
٭ پیور ڈائمنڈ ( خالص ہیرا ): یہ سب پتھروں سے زیادہ قیمتی ، زیادہ چمکدار اور بلوری رنگ کا ہوتا ہے
٭ کارپونڈا : کالے رنگ کا پتھر ہے، چمکدار ہے اور صنعتی کاموں میں استعمال کیا جاتا ہے
٭ بوررٹ : یہ پتھر بھورے رنگ کا ہے اور اسے بھی صنعتی کاموں میں استعمال کیا جاتا ہے

عربی جوہر شناسوں نے اس کوخو بصورت پتھر کو 4اقسام میں تقسیم کیا ہے
٭ کدونی : سفید رنگ کا ایک چمکدار ہیرا
٭ کراسی : چاند کی رنگت کا ہیرا
٭ حدیدی : آہنی لوہے کی رنگت کا ہیرا
٭ نوشادری : نوشادری رنگت کا ہیرا

دور جدید میں ہیرے کو 12اقسام میں تقسیم کیا گیا ہے، جن میں سے کچھ تو رنگوں کی مناسبت سے پہچانے جاتے ہیں۔
٭بادامی  ٭بنفشی ٭بسنتی ٭کتھی ٭ کلوہی ( ہلکا کالا ) ٭خاکستری ( بھورا ) ٭ نیلمی ( نیلا ) ٭ پستئی ( پستہ رنگ کا) ٭ کلوحی ( ہلکا زرد ) ٭ سیمابی ( پارے کی رنگت والا ) ٭ فرعونی ( ہلکا گلا بی ) ٭ کڑی ( داغدار )

ہیرے کی پہچان

ہیرے کی شناخت کرنا ہر کسی کے بس کی بات نہیں ، اس کی شناخت ایک تجربہ کار جوہری ہی کر سکتا ہے۔ شناخت کے بعد اس کے رنگ کو دیکھ کر قیمت کا اندازہ لگایا جاتا ہے۔ہیرا پتھرہمیشہ کسی بہت با اعتماد ادارے سے خریدنا چا ہیے اور لیبارٹری کی رسید کے ساتھ خریدے۔درج زیل پہچان ایک عام افراد کے لیے کافی ہے
٭ ہیرے میں سے الٹرا وائلٹ ریز کراس نہیں کر سکتی
٭ ہیرے میں کسی قسم کی لکیر اور بال نہیں آسکتا
٭ سورج سے شعاعیں جزب کر کے اندھیرے میں زیادہ چمکتا ہے
٭ یاقوت ، نیلم اور شیشے کو ہیرے سے کاٹا جا سکتا ہے
٭ الماس پتھرکی سطح لوہے کی ریتی سے بھی رگڑی نہیں جا سکے گی

الماس پتھر کے فوائد

٭ مقوی قلب ہے
٭ خوشی اور راحت نصیب ہوتی ہے
٭ آسیب اور بلائوں سے محفوظ رکھتا ہے
٭ عو رت کے لیے بہت مفید ہوتا ہے ( ماہواری اور رحم کی تمام بیماریوں کو ختم کر دیتا ہے) وضع حمل میں آسانی پیدا کرتا ہے
٭ ذہنی اور قلبی پریشانیوں کو دور کرتا ہے
٭ قوتِ ارادی کو مضبوط کرتا ہے
٭ عقل کو بڑھاتا ہے
٭ آ سمانی بجلی سے محفوظ رکھتا ہے
٭ سانپ اور زہریلے جانوروں سے محفوظ رکھتا ہے
٭ ہیرا پتھر پہننے سے آنکھوں کی بینائی میں اضافہ ہوتا ہے

الماس پتھر کے طبی فوائد

ہیرے کا کشتہ بہت سی بیماریوں کا علاج ہے، لیکن خیال رہے اگر کشتہ کچہ رہ جاے تو سخت ہونے کی وجہ سے معدے کو کاٹ دیتا ہے اور انسان کی موت واقع ہو جاتی ہے۔
٭ قوت باہ کے لیے مفید ہے
٭ سستی ، کمزوری ، نامردی اور کاہلی کو ختم کرتا ہے
٭ جنسی ہارمون پیدا کرتا ہے
٭ شوگر کو کنٹرول کرتا ہے
٭ انسو لین کی کمی کو دور کرتا ہے
٭ بانجھ پن کو دور کرتا ہے
٭ متعدد جسمانی عارضوں مثلا فالج ، لقوہ ، مرگی ، ریاحی دردوں ، گنٹھیا ، معدہ ، ادھرنگ اور نقرس کے لیے اکسیر ہے
ضروری بات
ہیرے کے کشتے کو ڈاکٹر یا حکیم کے مشورے کے بغیر ہر گز استعمال نہ کرے، اور پوری تسلی کرے کہ کشتہ صیح مدبر ہے۔کشتہ کچہ ہونے کی صورت میں انسان کی موت ہو جاتی ہے۔

الماس پتھر کے حامل افراد

ستارہ : (زہرہ) جب زہرہ رجت میں ہو تو اس کے نحس اثرات کو زائل کرتا ہے۔
برج : ( ثور۔ میزان )
نام کے ابتدائی حروف : ( ر۔را۔ری۔ ت۔تا۔ط۔طو۔ا۔عو۔ب۔د۔دی)۔
برتھ سٹون : ماہ اپریل اور مئی میں پیدا ہونے والوں کا برتھ سٹون الماس پتھر ہے۔
خوش قسمتی کا عدد : نام یا تاریخ پیدائش کی رو سے 6یا6پر تقسیم والے اعداد۔

Diamond Stone in English

Diamond Stone

Diamond ( Heera Stone ) is the most precious, shiny and crystalline of all stones. It shines like a rainbow in the light. It adorns the crowns of kings, emperors and emperors, and adorns the ornaments of the world’s most beautiful women, queens and princesses. It was kept in the royal treasury so Also called royal stone.

The discovery is said to have been made 8,000 years before Christ, but no information is available about the nation or country in which it was discovered.

A diamond cannot be cut by the sharpest metal, it can only be cut with a surf (diamond).

In the present advanced age, diamonds are cut with the help of machines developed by modern technology, but diamond pens are also used in this. Regular factories have been set up in Europe, England and France for cutting diamonds.

No chemicals are needed to do this, but it is already very shiny. After cutting, it is polished with its grains. This stone is also extracted from the ears and found in the sand of rivers with pebbles and stones. Since diamonds are very precious, wearing them is not just a matter of the common man, it is only the clothing of princes, ministers and kings.

Chemical ingredients

Diamond ( Heera Stone ) contains only one chemical element and is 100% carbon. Because coal also contains carbon, coal is also called black diamond.

Name of Diamond gems

  • In Urdu (Almas)
  • In Punjabi (Heera)
  • In Sanskrit (Herak)
  • In English (Diamond)

Types of Diamond Stones

Because the stone is so precious, astronomers and astronomers around the world have categorized it according to their own ideas to avoid deception.

There are 4 types of this stone according to the classification of Hindus by their castes.

  1. Brahmani diamond: the highest and brightest diamond ( Almas Stone ).
  2. Kashtari Herak: Transparent and honey-colored diamond۔
  3. Wish diamond: greenish transparent diamond۔
  4. Shudra Herak: A transparent brown diamond۔

In Iran, diamonds are divided into 5 types

  1. Mercury: Mercury colored diamond۔
  2. Mica: The glittering diamond of mica۔
  3. Crystal: transparent and shiny diamond۔
  4. Abyssinian: black diamond۔
  5. Zaghi: It is also prone to ink۔

European experts have described 3 types.

  1. Pure Diamond ( Almas Stone ): It is more precious than all stones, more shiny and crystalline.
  2. Carponda: is a black stone, is shiny and is used in industrial works۔
  3. Burritt: This stone is brown in color and is also used in industrial works۔

Arabic astronomers have divided this cochineal stone into 4 types

  1. Kaduni: A shiny white diamond۔
  2. Crossi: A moon-colored diamond۔
  3. Hadeedi: Iron-colored diamond۔
  4. Naushadri: Naushadri is a diamond of color۔

Diamond original or fake

Identifying a diamond ( Heera Stone ) is not just for everyone, only an experienced atomist can identify it. After identification, the price is estimated by looking at its color. The diamond stone should always be bought from a very reliable company and with a laboratory receipt. The following identification is enough for a common person.

  • Ultraviolet rays cannot cross through diamonds.
  • Diamonds do not have any lines or hair.
  • Absorbs rays from the sun and shines more in the dark.
  • Rubies, sapphires and glass can be cut with diamonds.
  • The surface of the diamond stone will not be rubbed even with iron sand.

Benefits of Diamond Stone

  • Strengthens the heart.
  • Happiness and comfort.
  • Protects from harm and calamities.
  • Very useful for women (eliminates all menstrual and uterine diseases) facilitates childbirth).
  • Removes mental and heart problems.
  • Strengthens the will power.
  • Increases the intellect.
  • Protects from lightning.
  • Protects from snakes and poisonous animals.
  • Wearing diamonds increases eyesight.

For More Information about Diamond Gemstone Wikipedia

Admin

Proud Tips | The largest Urdu web site of general knowledge about Gemstone Name in Urdu, Horoscope in Urdu, Islamic Names, Islam, Baby Names, kids, And More...

Leave a Reply